• 21 مئی, 2022

سیف کا کام قلم سے ہی دکھایا

’’وَاِذَاالصُّحُفُ نُشِرَتْ‘‘
سیف کا کام قلم سے ہی دکھایا ہم نے
مالٹی زبان میں تبلیغی رسالہ کی اشاعت کے 50 شمارے

حضرت اقدس مسیح موعود علیہ السلام کے دور میں کتابوں اور نوشتوں کے بکثرت شائع ہونے کی پیشگوئی کے مطابق دورِ حاضر میں جس کثرت کے ساتھ کتب و رسائل کی اشاعت ہوئی ہے اس کی نظیر تاریخ انسانی میں نہیں ملتی۔ یہ بات جہاں قرآنی پیشگوئی کی صداقت کی دلیل ہے وہیں اس بات کی طرف بھی اشارہ ہے کہ مسیح آخرالزماں کے دور میں اسلام کی تبلیغ و اشاعت کیلئے کتب و رسائل ایک اہم ذریعہ ثابت ہونگے۔

اللہ تعالیٰ کے خاص فضل و کرم اور پیارے آقا ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز کی دعاؤں کی برکت سے جماعت احمدیہ مالٹا جہاں تبلیغ اسلام احمدیت کے لئے دوسرے ذرائع بروئے کار لانے کی سعادت پارہی ہے وہیں تبلیغ کے لئے کتب و رسائل کی اشاعت کی بھی توفیق پارہی ہے۔ جماعت احمدیہ مالٹا نے جنوری 2018ء سے مقامی مالٹی زبان میں تبلیغی رسالہId-Dawl، جس کا مطلب نور اور روشنی ہے، کی اشاعت کا اجراء کیا اور اب تک اس رسالہ کے 50 شمارے شائع ہوچکے ہیں۔ فَالْحَمْدُ لِلّٰہِ عَلیٰ ذَالِکَ

Id-Dawl۔روشنی
رسالہ کے اجراء کا پس منظر

مؤرخہ 6، اپریل 2017ء کو مالٹا کے نیشنل ٹیلیویژن پر ایک انٹرویو میں مالٹا میں لیبیا کے زیر انتظام بننے والی مسجدکے پیش امام مکرم امام محمد السعدی صاحب نے جماعت احمدیہ مسلمہ کی کھل کر مخالفت کی اور کہا کہ ہم احمدیوں کو مسلمان تصور نہیں کرتے اور ان کا اسلام سے کوئی تعلق نہیں اور نہ ہی یہ mainstream مسلمانوں کی نمائندگی کرتے ہیں۔کہنے لگے عاطف (مبلغ مالٹا) کو اپنے آپ کو مسلمانوں کا لیڈر کہنے سے رک جانا چاہئے اور میڈیا کو بھی انصاف سے کام لینا چاہئے اور چند افراد پر مشتمل فرقہ کے لوگوں کو ٹیلیویژن پر وقت نہیں دینا چاہئے۔

اس واقعہ کی تفصیل پیارے آقا کی خدمت میں لکھی گئی جس کے جواب میں حضور انور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز نے فرمایا کہ۔ ’’دعا۔ زیادہ کوشش سے پریس میں جائیں۔‘‘

پیارے آقا کے ان مبارک کلمات نے ہمیں بہت ہمت و حوصلہ دیا اورسنی امام صاحب کی جماعت کے خلاف کھل کر مخالفت نے جماعت کے عزم و استقلال میں مزید قوت بھردی اور کھاد کا کام کیا۔ اور جماعت احمدیہ مالٹا نے ایک تبلیغی رسالہ کے اجراء کا منصوبہ بنایا تاکہ اشاعت اسلام احمدیت کے کام کو مزید وسعت دی جاسکے نیز یہ کہ باقاعدگی کے ساتھ اسلام اور احمدیت کے خلاف اْٹھنے والے اعتراضات کے جوابات اور اسلام احمدیت کی خوبصورت تصویر لوگوں کے سامنے پیش کی جاسکے۔ اس رسالہ کی اشاعت کے لئے حضور انور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز کی خدمت اقدس میں منظوری کے لئے درخواست پیش کی گئی جسے حضور اقدس نے ازراہ شفقت قبول فرماتے ہوئے رسالہ اور اس کے نام کی منظوری عطا فرمائی۔

اَلْحَمْدُ لِلّٰہِ ثُمَّ اَلْحَمْدُ لِلّٰہِ کہ جنوری 2018ء سے اس تبلیغی رسالہ کی اشاعت باقاعدہ جاری وساری ہے اور یہ رسالہ اسلام احمدیت کے پیغام کی اشاعت کا ایک موٴثر ذریعہ ثابت ہورہا۔ یہ رسالہ مواد کے ساتھ ساتھ ظاہری طور پر بھی نہایت دیدہ زیب ہے۔ اس رسالہ کو عوام الناس میں تقسیم کرنے کے ساتھ ساتھ اسے جماعتی ویب سائیٹ پر بھی آن لائن کیا جاتا ہے نیز سوشل میڈیا کے ذریعے بھی اسے لوگوں تک پہنچایا جارہا ہے۔ اس رسالہ کی اشاعت کا ایک بہت بڑا فائدہ یہ بھی ہے کہ اس کے ذریعے مقامی مالٹی زبان میں تبلیغی مواد بھی ساتھ ساتھ تیار ہورہا ہے۔

ایک ایمان افروز واقعہ

جیسا کہ رسالہ کے پس منظر میں مسجد کے سنی امام صاحب کی مخالفت کا ذکر ہے اور یہ کہ اس رسالہ کے اجراء کا مقصد گھروں تک پیغام اسلام احمدیت پہنچانا ہے، اللہ تعالیٰ کے فضل وکرم سے وہ امام صاحب جن کی مخالفت نے جماعت کو رسالہ کی اشاعت کی طرف توجہ دلائی آج سوشل میڈیا کے ذریعے ان کے گھر میں بھی یہ رسالہ پہنچ رہا ہے۔ فَالْحَمْدُ لِلّٰہِ عَلیٰ ذَالِکَ۔ اس بات کا علم اس طرح ہوا کہ اس رسالہ کے چوتھے شمارہ میں جماعت احمدیہ کے تعارف اور حضرت اقدس مسیح موعود علیہ الصلوٰۃ والسلام کے مشن کے بارے میں دو مضامین شائع کئے گئے تھے۔ ان مضامین پر مسجد کے امام صاحب کے ایک بیٹے نے سوشل میڈیا پر تبصرہ کیا اور اپنے comments لکھے۔ یہ تاثرات جماعت کی مخالفت میں تھے تاہم اس سے یہ حقیقت عیاں ہوئی کہ وہ امام صاحب جو جماعت کی مخالفت میں ہمیشہ کمربستہ رہتے ہیں اور جماعت کی آواز کو بند کرنا چاہتے تھے اللہ تعالیٰ نے ان کے گھر تک پیغام احمدیت پہنچانے کے سامان بہم پہنچادئیے۔ فَالْحَمْدُ لِلّٰہِ عَلیٰ ذَالِکَ۔ یہ واقعہ تائیدات الٰہیہ کا منہ بولتا ثبوت ہے۔

مضامین کی نوعیت

اس رسالہ میں مختلف موضوعات جن میں ہستی باری تعالیٰ، سیرت النبی ﷺ، قرآن کریم اور اسلام کے بارہ میں مضامین شائع کئے جاتے ہیں۔ اس کے علاوہ اسلام احمدیت پر ہونے والے اعتراضات کے جواب اور مقامی اور بین الاقوامی current issues کے بارہ میں اسلامی تعلیمات اور اسلامی نقطہ نظر پیش کیا جاتا ہے۔ یہ رسالہ خلیفہ وقت ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز کی مبارک آواز قارئین تک پہنچانے کا ایک اہم اور موٴثر ذریعہ ہے۔

رسالہ کے 50 ویں شمارہ کی اشاعت

اللہ تعالیٰ کے خاص فضل و کرم اور پیارے آقا ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز کی دعاؤں کی برکت سے جماعت احمدیہ مالٹا کو اس رسالہ کے 50 ویں شمارہ کی اشاعت کی توفیق ملی ہے۔ فَالْحَمْدُ لِلّٰہِ عَلیٰ ذَالِکَ۔ اس خصوصی شمارہ کے لئے پیارے آقا نے ایک خصوصی پیغام بھی ارسال فرمایا جو ہمارے لئے نہایت خوشی و طمانیت کا باعث ہے جس کا مفہوم پیش ہے۔

پیغام حضور انور ایدہ

پیارے آقا فداہ امی وابی نے اپنے محبت بھرے پیغام میں لکھا کہ عزیز قارئین Id-Dawl۔ اَلسَّلَامُ عَلَیْکُمْ وَرَحْمَةُ اللّٰہِ وَبَرَکَاتُہٗ۔ مجھے بہت خوشی ہے کہ اللہ تعالیٰ کے فضل سے فروری 2022ء میں آپ کے ماہانہ رسالہ ID-DAWL کاپچاسواں ایڈیشن شائع ہوگا۔ اَلْحَمْدُ لِلّٰہِ۔ اللہ تعالیٰ آپ پر فضل فرمائے اور آپ کو توفیق عطا فرماتا چلا جائے کہ آپ قارئین کو اسلام کی حقیقی تعلیمات جو تمام بنی نوع انسان کے لئے امن اور ہم آہنگی کو فروغ دیتی ہیں سے متعارف کرائیں۔

حضرت مسیح موعود علیہ السلام نے فرمایا ہے کہ آخری زمانہ کے بارہ میں قرآن کریم کی متعدد پیش گوئیوں میں سے ایک یہ ہے کہ کتب کی کثرت سے اشاعت ہوگی۔ چنانچہ اللہ تعالیٰ نے آخری زمانہ میں نہ صرف اسلام کی فتح کی پیشگوئی دی بلکہ ہمیں اس کی تبلیغ کے ذرائع بھی فراہم کئے۔ اس رسالہ کی اشاعت کا مقصد بھی تبلیغ اسلام ہے، جس مقصد کے لئے حضرت اقدس مسیح موعود علیہ السلام دنیا میں تشریف لائے۔اللہ تبارک و تعالیٰ نے اب ہمیں اسلام کے پیغام کی اشاعت کے لئے مختلف طریق اور ذرائع مہیا کئے ہیں جن میں اشاعت بھی شامل ہے۔ اللہ تعالیٰ آپ کو ان وسائل کو صحیح طریقے سے استعمال کرنے کا موقع عطا فرمائے اور آپ کو حضور اکرم صلی اللہ علیہ وسلم اور اسلام کی خوبصورت تعلیمات کو موٴثراور مثالی طور پر پھیلانے کی قابل ستائش خدمات انجام دینے کی توفیق عطا فرمائے۔

اس سے کوئی فرق نہیں پڑتا کہ ہم دنیا میں کہاں خدمت کررہے ہیں، ہمارا مقصد حضرت مسیح موعود علیہ السلام کے پیغام کو دنیا کے کونے کونے تک پہنچانا ہے۔ اللہ تبارک و تعالیٰ ضرور اس کو پورا کرے گا کیونکہ اس نے حضرت مسیح موعود علیہ الصلوٰۃ والسلام پر وحی کی تھی کہ ’’میں تیری تبلیغ کو زمین کے کناروں تک پہنچاؤں گا‘‘۔ اور اس کام کے لئے اس نے ہمیں بے شمار وسائل مہیا کیے ہیں۔

صرف اسی صورت میں جب ہم خود غور کریں اور اپنی ذمہ داریوں کی اہمیت کو پوری طرح سمجھیں اور تبلیغی سرگرمیوں میں بھی حصہ ڈالیں تو ہم صحیح معنوں میں اپنی ذمہ داریوں کو پورا کرتے ہوئے نظر آئیں گے۔ تب ہی ہم ان خوش نصیبوں میں شامل ہوسکتے ہیں جو قرب الہٰی حاصل کرتے ہیں۔ اللہ تعالیٰ آپ کو اس کی توفیق دے۔ اللہ تعالیٰ آپ سب پر بہت فضل فرمائے۔ آمین

تمام معزز قارئین کی خدمت اقدس میں دعا کی درخواست ہے کہ اللہ تعالیٰ اس رسالہ کو اسلام احمدیت کی تبلیغ کے لئے ایک مثالی رسالہ بنادے اور اس کے مبارک ثمرات عطا فرمائے۔ آمین۔ معزز قارئین اس رسالہ کے تمام شمارہ جات مندرجہ ذیل لنک کے ذریعے ملاحظہ فرماسکتے ہیں۔ بذریعہ فون یا ای میل آپ کی آراء ہمارے لئے راہنمائی کا باعث ہوں گی۔ فَجَزَاکُمُ اللّٰہُ اَحْسَنَ الْجَزَآء فِی الدُّنْیَا وَالْاٰخِرَۃِ۔ www.ahmadiyya.mt/id-dawl

پچھلا پڑھیں

عید مبارک

اگلا پڑھیں

بیکار اور نکمی چیزوں کا خرچ