• 28 اکتوبر, 2021
آج کا شمارہ
صداقت کا پرچم اُٹھائے ہوئے ہیں

صداقت کا پرچم اُٹھائے ہوئے ہیں

قدم کارواں سے ملائے ہوئے ہیںصداقت کا پرچم اُٹھائے ہوئے ہیںتمہارے نشانے پہ آئے ہوئے ہیںستم سَہ کے بھی مسکرائے ہوئے ہیںبگاڑیں گیں کیا یہ مخالف ہوائیںزمیں پر قدم ہم جمائے ہوئے ہیںہمی روشنی کا…

نظم
’’اے پیارے طالع‘‘

’’اے پیارے طالع‘‘

خلافت کے ہیرے، وفا کے حوالے، مجسم اجالے، مرے پیارے طالعخلافت کے عاشق، دل و جاں اُسی پر فدا کرنے والے، مرے پیارے طالعتو تھا نیک طینت، تو تھا پاک صورت، نہ تھی دل میں…

حضرت اقدس مسیح دوراں مرزا غلام احمد قادیانی
اوصاف ِقرآن مجید

اوصاف ِقرآن مجید

نور فرقاں ہے جو سب نوروں سے اَجلی ٰنکلاپاک وہ جس سے یہ انوار کا دریا نکلاحق کی توحید کا مرجھا ہی چلا تھا پوداناگہاں غیب سے یہ چشمہ اصفی نکلایا الٰہی تیرا فرقاں ہے…

نظم
اے مرے مشکل کشا

اے مرے مشکل کشا

اے مرے مشکل کشا! میرے خدا! حاجت برار!فضل کا سایہ ہو مجھ پر میں ہوا زار و نزاررحم کا ہوں منتظر، ہے تیری بخشش پر نظرگر نہ ہو تیری عنایت کچھ نہ ہو میرا شمارسر…

نظم
دنیا ہے چار دن کی

دنیا ہے چار دن کی

مومن اسیر جس میں، دنیا وہ آشیاناکافر کے واسطے گو جنّت ہے یہ ٹھکانادنیا کی عیش وعشرت میں رات دن لگانادنیا کو جیتنے میں سانسوں کا ہار جاناہرگز نہیں ہے کافی کلمہ زباں سے پڑھناتقویٰ…

نظم
غزل

غزل

کہیں کسی کے لیے بات یہ عجیب نہ ہونجیب کیسے ہو، جو بندۂ منیب نہ ہوملے وہ مجھ سے مگر ساتھ میں رقیب نہ ہوپھر اس کے بعد گھڑی ہجر کی نصیب نہ ہورکھے وہ…

نظم
شان مصلح موعود رضی اللہ عنہ

شان مصلح موعود رضی اللہ عنہ

آسماں سے مہدئ موعود نے پائی خبرنور کا پیکر ملے گا تجھ کو اک لخت جگرساری قومیں برکتیں پائیں گی اس موعود سےنورفرقاں پائے گا سارا جہاں محمود سےدرحقیقت آپ کا استاد تھا رب کریمآپ…

نظم
12 ربیع الاول جشنِ عید میلاد النبی ﷺ

12 ربیع الاول جشنِ عید میلاد النبی ﷺ

نعتِ رسولِ مقبولﷺ مرحبا مصطفیٰ ﷺ گنگنائیں گے ہمعید جشنِ ولادت منائیں گے ہمگھر چراغوں سے اپنے سجائیں گے ہماور نغمے درودوں کے گائیں گے ہمیہ دفیں مدحتوں کی بجائیں گے ہمیوں محبت نبی ﷺ…

حضرت اقدس مسیح دوراں مرزا غلام احمد قادیانی
حمد رب العالمین

حمد رب العالمین

کس قدر ظاہر ہے نور اُس مبدء الانوار کابن رہا ہے سارا عالم آئینہ ابصار کاچاند کو کل دیکھ کر میں سخت بے کل ہوگیاکیونکہ کچھ کچھ تھا نشاں اس میں جمال یار کااُس بہار…

نظم
اے طالع مرے، زندہ ترا نام رہے گا

اے طالع مرے، زندہ ترا نام رہے گا

اے طالع مرے، زندہ ترا نام رہے گاتُو تا بہ ابد باعثِ اکرام رہے گامعلوم تھے سب تجھ کو محبت کے قرینےجو تو نے دیا زندہ وہ پیغام رہے گاتو رشک کے قابل ہے مرے…