• 21 مئی, 2022

زندہ خدا سے دل کو لگاتے تو خوب تھا

زندہ خدا سے دل کو لگاتے تو خوب تھا
(کلام حضرت خلیفۃ المسیح الثالثؒ)
(زمانہ طالب علمی کی ایک نظم)

عیسیٰ کو چرخ پہ نہ بٹھاتے تو خوب تھا
احمدؐ کو خاک میں نہ سلاتے تو خوب تھا

زندہ خدا سے دل کو لگاتے تو خوب تھا
مردہ بتوں سے جان چھڑاتے تو خوب تھا

قصے کہانیاں نہ سناتے تو خوب تھا
زندہ نشان کوئی دکھاتے تو خوب تھا

اپنے تئیں جو آپ ہی مسلم کہا تو کیا
مسلم بنا کے خود کو دکھاتے تو خوب تھا

تبلیغ دین میں جو لگا دیتے زندگی
بے فائدہ نہ وقت گنواتے تو خوب تھا

دنیا کی کھیل کود میں ناصر پڑے ہو کیوں
یاد خدا میں دل کو لگاتے تو خوب تھا

(حیات ناصر صفحہ59۔60)

پچھلا پڑھیں

الفضل آن لائن 7 مارچ 2022

اگلا پڑھیں

ارشاد باری تعالیٰ