• 21 مئی, 2022

ہر کسی سے پرے پرے رہنا

ہر کسی سے پرے پرے رہنا
سہمے سہمے ڈرے ڈرے رہنا

تم نے کیا روگ پال رکھے ہیں
جب بھی دیکھو مرے مرے رہنا

سانحہ کیا ہوا دسمبر میں
جون میں بھی ٹھرے ٹھرے رہنا

خالی کر دے نہ میری آنکھوں کو
آنسوؤں کا بھرے بھرے رہنا

دوستی رکھنا حکمرانوں سے
اور بظاہر کھرے کھرے رہنا

لکھے ہونا خزاں مقدر میں
پھر بھی قدؔسی ہرے ہرے رہنا

(عبدالکریم قدؔسی۔ امریکہ)

پچھلا پڑھیں

الفضل آن لائن 13 مئی 2022

اگلا پڑھیں

کرب کے وقت کی دعا