• 4 مارچ, 2024

لوائے مصطفیٰ ؐ تھامے

ہمیں سب غم اٹھانے ہیں لوائے مصطفیٰ ؐ تھامے
مگر پھر گیت گانے ہیں لوائے مصطفیٰ ؐ تھامے

خدا نے جو اتاری ہے اسی مشعل کی جگ مگ سے
اندھیرے سب مٹانے ہیں لوائے مصطفیٰ ؐ تھامے

چلے ہیں عزم یہ لے کر سبھی رستے صداقت کے
زمانے کو دکھانے ہیں لوائے مصطفیٰ ؐ تھامے

خلافت کی اطاعت کے، محبت کے، عقیدت کے
میسر سب خزانے ہیں لوائے مصطفیٰ ؐ تھامے

پڑے ہیں آج بھی، یارو! جو غفلت کے لحافوں میں
وہ سوئے سب جگانے ہیں لوائے مصطفیٰ ؐ تھامے

نہ رکنا ہے، نہ جھکنا ہے کسی بھی ظلم کے آگے
قدم آگے بڑھانے ہیں لوائے مصطفیٰ ؐ تھامے

سنو زاہد! سدا جاری ہیں اب چشمے خلافت کے
یہ ہم نے راز جانے ہیں لوائے مصطفیٰ ؐ تھامے

(سید طاہر احمد زاہد)

پچھلا پڑھیں

فقہی کارنر (کتاب)

اگلا پڑھیں

ارشاد باری تعالیٰ