• 19 اپریل, 2021

’’آج شیدائے خلافت‘‘ چل دیا

ایک مینارِ محبت چل دیا
وہ یقینا منتظم تھا بے مثال
وہ سراپا دستِ شفقت چل دیا
خدمتِ دیں میں کمربستہ رہا
اک مثالِ عزم و ہمت چل دیا
اپنے پیاروں، چاہنے والوں سے آج
لے کے رخصت اور اجازت چل دیا
رات دن جدوجہد دیں کے لیے
صاحبِ رُعبِ صداقت چل دیا
اس کو ازبر تھے مؤدِب کے سبق
وہ علمدارِ عقیدت چل دیا
اک مربیّ، محسنِ قدسیؔ تھا وہ
ہنس کر حسبِ روایت، چل دیا

(از مکرم عبد الکریم قدسی ؔصاحب
1442ھ)

پچھلا پڑھیں

الفضل آن لائن 18 مارچ 2021

اگلا پڑھیں

الفضل آن لائن 19 مارچ 2021