• 20 جون, 2021

حضرت ِمسرور کے ہمراہ رہتا ہے خدا

غیر ممکن ہے کریں بارش کے قطروں کو شمار
ہیں جماعت پر خدا کے فضل اس سے بھی سِوا
وہ جو آنحضرتؐ نے دی تھی اِک مسیحاؑ کی خبر
قادیاں دارالاماں سے اک جری اللہ اُٹھا
پھر کیا قرآن کی دائم شریعت کا قیام
سربراہ اسلام کا ہے اب خلیفہ پانچواں
کارناموں کی ہمہ جہتی سے روشن تر ہوا
ہے مسیحائے زماں کے نام سب فتح وظفر
ہو رہا ہے آج مغرب سے طلوعِ آفتاب
مجلسیں بین المذاہب ہو رہی ہیں جابجا
امن کے سمپوزیم ہیں امن کے انعام ہیں
مقتدر لوگوں کو خط لکھے ہدایت کے لئے
اپنے آقا کی یہ خواہش پوری کرتا ہے غلام
شش جہت میں امن کا اب ایک ہی پیغام ہے
اپنے خالق کی طرف آؤ ملے گی عافیت
کیا سیاست دان دے پائے ہیں انساں کو اماں؟
اس تباہی سے بچا سکتا وہ قادر خدا
رعب سے نصرت ملی اتنی کہ سب پر چھا گئے
جس طرف دیکھیں ہے تازہ ولولہ ہر سو رواں
افتتاح ہے اور مساجد کی کہیں بنیاد ہے
مشنری کا گھر ’سرائے‘ گیسٹ ہاؤس ’ہسپتال‘
اب پریس اپنے ہیں چھپتی ہیں کتابیں بے شمار
ہر صورتِ ابلاغ ہے اب خادمِ دین متیں
سات دن چوبیس گھنٹے ساری دنیا کو پیام
اک نئی دنیا بنادی عربی چینل کھول کر
کرتے ہیں تلقین ہر لمحہ دعا کرتے رہیں
وہ زمیں جس پر گرا ہے احمدی لوگوں کا خوں
خالی ہے اب قرب کا میداں چلو آگے بڑھیں
ہر گھڑی ہر وقت اپنے جائزے لیتے رہیں
جو بھی اس آغوش میں آئے گا راحت پائے گا
کر عطا ہر خیر آقا کو الہ العالمیں
آسماں کے تاروں اور مٹی کے ذروں کو شمار
ہم پہ رب کی رحمتوں کا مستقل دَر ہے کھلا
جس کی خاطر دیکھتے تھے راہ سب اہلِ نظر
اس مسیحؑ و مہدیؑ نے اسلام کا اِحیا کیا
احمدیت میں ہوا جاری خلافت کا نظام
برق رفتاری سے شہراہِ ترقی پر رواں
حضرت مسرور کے ہمراہ رہتاہے خدا
ساتھ رہتی ہے سدا تائیدِ خدائے مقتدر
ہر طرف ہے امن کی دعوت سے برپا انقلاب
اونچے ایوانوں میں گونجا ہے پیامِ مصطفیؐ
بے غرض سب خدمتیں انسانیت کے نام ہیں
درد مند دل سے بنی نوع کی محبت کے لئے
دوسروں سے جاکے انگریزی میں کرتا ہے کلام
پانچوں براعظموں میں یہ صدائے عام ہے
ایک حل ہے سب مسائل کا فقط وحدانیت
ایٹمی ٹکراؤ کی جانب ہے سب دنیا رواں
جس نے ہے اسلام کا سچا صحیح رستہ دیا
آپ کے افکار سارے میڈیا پر آگئے
اب تو گھر گھر میں پہنچتی ہے صدائے قادیاں
ہر خدا کا گھر خدا کے ذکر سے آباد ہے
ہر طرف پھیلا دیا ہے کالج سکولوں کا جال
ساری دنیا کھا رہی ہے باغِ احمدؑ کے ثمار
بٹ رہے ہیں خوب روحانی خزائن بالیقیں
خوب پھل لایا ہے ایم ٹی اے کا بابرکت نظام
ہورہی ہے خوب ہی تبلیغ عربی بول کر
عرش کے پائے ہلادیں فضل و رحمت مانگ لیں
اس کی خاطر بھی دعا کرتے ہیں باصبر و سکوں
اور مسیحائے زماںؑ کی دعا کے ہم وارث بنیں
ہر قدم ہم نیکیوں میں آگے بڑھاتے رہیں
یہ خدا کے ہاتھ کا پودا ہے بڑھتا جائے گا
اپنے فضلوں سے بچا ہر شر سے رب عالمیں

(امۃ الباری ناصر۔ امریکہ)

پچھلا پڑھیں

الفضل آن لائن 26 مئی 2021

اگلا پڑھیں

الفضل آن لائن 27 مئی 2021