• 23 ستمبر, 2021

خلافت کی غلامی ہے ضمانت تیری قربت کی

خلافت کی غلامی ہے ضمانت تیری قربت کی
ہمیں بھی اس کے قدموں کی ہمیشہ خاکِ پا رکھنا
اگر نورِ نبوت سے منور جگ کو کرنا ہے
تو روشن ہر جگہ ہر دم خلافت کا دیا رکھنا
اگر ہے تم کو ملنا اوّلیں سے! آخریں ہو کر
خلافت کی امانت سے دلوں کو آشنا رکھنا
کلیساؤں کی دنیا کی صلیبیں جس نے توڑی ہیں
ہمارے سر پر اس مہدی کی تو ہر دم رِدا رکھنا

(شہناز اختر)

(وفا کے قرینے صفحہ440)

پچھلا پڑھیں

الفضل آن لائن 31 اگست 2021

اگلا پڑھیں

الفضل آن لائن سے استفادہ کرنے کے ذرائع