• 18 اپریل, 2024

باندھا ہے اطاعت سے ہی اک عہد ہمیشہ

اونچے کئے ہیں مصطفیؐ کے ہم نے منارے
دیتے ہیں گواہی یہی سو سال ہمارے

ہم نے خدا کے واسطے خود کو ہے بھلایا
ہم نے مسیح وقت کے سمجھے ہیں اشارے

قربان کئے رشتے سبھی دین کی خاطر
بھائی ہو وہ بیٹا ہو وہ شوہر ہوں پیارے

جیسے خدا نے خود ہمیں ہاتھوں میں اٹھایا
دیکھے ہیں یوں تائید الٰہی کے نظارے

اللہ کرے تابندہ ہو ہر نسل ہماری
اللہ کرے اخلاص کے بہتے رہیں دھارے

تا عمر خلافت کا ہو سایہ یونہی پھیلا
بیٹھیں جہاں بےتاب ہم اور بچے ہمارے

ہاتھوں کو اٹھاتے ہوئے بس یہ ہی دعا ہے
مل جائیں محبت کے سبھی ہم کو ستارے

چلتے ہوئے ان ہونٹوں پہ تکبیر تری ہو
گرتے ہوئے سجدے میں یہ دل تجھ کو پکارے

باندھا ہے اطاعت سے ہی اک عہد ہمیشہ
کتنے ہی زمانے یوں دیاؔ ہم نے سنوارے

(دیا جیم۔ فجی)

پچھلا پڑھیں

فقہی کارنر

اگلا پڑھیں

ارشاد باری تعالی