• 19 جون, 2024

نیشنل اجتماع انصار اللہ سیرالیون2022ء

مکرم حافظ محمود احمد صاحب طاہر۔ آفس انچارج مجلس انصاراللہ سیرالیون تحریر کرتے ہیں کہ:
اللہ تعالیٰ کے فضل و کرم سے موٴرخہ 3-4؍دسمبر 2022ء مجلس انصار اللہ سیرالیون کا نیشنل اجتماع بڑی کامیابی سے اختتام پذیر ہوا۔ Covid کی وبا کے بعد مجلس انصار اللہ کا یہ دوسرا ملکی اجتماع تھا۔ اجتماع کی تیاری کے لئے اجتماع کمیٹی کا قیام عمل میں لایا گیا جس نے کئی ماہ پہلے اجتماع کی تیاری کے لئے اجلاسات کا انعقاد شروع کر دیا۔ اجتماع کے لئے دارالحکومت فری ٹاؤن کی سب بڑی جامع مسجد احمدیہ بیت السبوح (Kissy docyard) کا انتخاب کیا گیا یاد رہے کہ یہ مسجد اپنی وسعت اور خوبصورتی کے لحاظ سے ایک مثال ہے اور احمدیوں کے علاوہ غیر احمدی بھائیوں کی ایک کثیر تعداد پنج وقتہ نمازوں اورنماز جمعہ میں شریک ہوتی ہے۔ اجتماع میں شرکت کرنے کے لئے دور دراز جگہوں سے جمعۃ المبارک سے انصار آنے شروع ہوگئے تھے اور جمعہ کی رات تک ہر طرف خوب رونق تھی۔ اس دفعہ اجتماع کا مین تھیم (main theme) ’’انفاق فی سبیل اللہ‘‘ تھا اس لئے مرکزی بینر اور دیگر بینرز قرآن، حدیث اور حضرت مسیح موعود علیہ السلام کے انفاق فی سبیل اللہ کے متعلق تھے۔ اسی طرح انصار اللہ کا مفلر لا غالب الا اللّٰہ کے ring کے ساتھ تیار کروایا گیا جس کو اجتماع کے موقعہ پر نیشنل عاملہ کے ممبران اور دیگر انصار پہنے ہوئے تھے اور انتہائی دیدہ زیب منظر پیش ہو رہا تھا۔ اجتماع کا آغاز تہجد باجماعت سے ہوا جس کے بعد نماز فجر اور درس القرآن کا اہتمام کیا گیا۔ اس کے بعد صبح کی سیر (Morning walk) کا پروگرام تھا جس میں تمام انصار نے بڑے شوق سے حصہ لیا۔

اجتماع کا پہلا سیشن مکرم Abdulai Kuwusu Sesay صدر مجلس انصار اللہ سیرالیون کی زیر صدارت شروع ہوا۔ مکرم صدر صاحب نے افتتاحی خطاب میں انصار اللہ کو ان کی ذمہ داریوں کی طرف متوجہ کیا اور بتایا کہ اپنی تربیت کے علاوہ نہایت اہم ذمہ داری اگلی نسلوں کو وفا کا درس دینا اور اس پر قائم رکھنے کی تاکید سے ہے۔ انہوں نے چندہ مجلس کو شرح کے ساتھ ادا کرنے کی طرف بھی توجہ دلائی۔ مکر مولانا منیر حسین صاحب نائب صدر اول انصار اللہ نے بھی انصار اللہ کو خلفاء کے ارشادات کی روشنی میں ان کی ذمہ داریوں کی طرف توجہ دلائی۔ ان کی تقریر کے بعد علمی مقابلہ جات کا آغاز ہوا جو کافی دیر تک جاری رہے۔ انصار نے ان مقابلوں میں بھر پور حصہ لیا۔ ان مقابلہ جات میں تلاوت قرآن کریم، حفظ القرآن، خطبات امام، قصیدہ، تقریر، پیغام رسانی اور انصاراللہ کا عہد شامل تھے۔ اجتماع کا دوسرا سیشن بعد از نماز عصر مولانا سعید الرحمٰن صاحب (مبلغ انچارج و نائب امیر اول) کی زیر صدارت ہوا۔ مبلغ انچارج صاحب نے اپنے خطاب میں انصار اللہ کو مختلف تربیتی ذمہ داریوں کی طرف توجہ دلائی۔ انہوں نے سیرالیون میں احمدیت کی تاریخ سے انتہائی ایمان افروز واقعات بیان کئے اورآئندہ نسلوں کی اصلاح کی طرف توجہ دلائی۔ اجتماع کےدوسرے دن ورزشی مقابلہ جات بھی ہوئے اور انصار نے بڑی دلچسپی سے ان مقابلوں کو دیکھا اور حصہ بھی لیا۔ نماز مغرب وعشاءکی ادائیگی کے بعد سوال وجواب کا سیشن ہوا۔ مکرم مولانا سید سعید الحسن شاہ صاحب مربی سلسلہ نے سوالات کے جواب دیے۔ انصار کی دلچسپی کی وجہ سے یہ پروگرام کافی لمبا چلا۔

دوسرے دن کا آغاز بھی تہجد باجماعت سے ہوا جس کے بعد درس القرآن کا اہتمام کیا گیا۔ اس کے بعد اجتماعی ورزش اورصبح کی سیر کروائی گئی۔ اس کے بعد سیر کےمتعلق محسوسات پر مضمون نویسی کا مقابلہ بھی کروایا گیا آج کے دن انصار اللہ کی مجلس شوری کا انعقاد کیا گیا نمائندگان نے حضور انور کی طرف سے بحث کے لئے منظور شدہ تجاویز پر اپنے خیالات کا اظہار کیا۔ ایک سب کمیٹی تربیتی امور کے لئے بنائی گئی۔ دوسری سب کمیٹی بجٹ تجاویز کے لئے تھی۔ شوریٰ میں نمائندگان نے ان تجاویز پر خیال آرائی کی اور تمام نمائندگان نے حتمی تجاویز کی تائید کی۔

نماز ظہر و عصر کے بعد اجتماع کا اختتامی سیشن مکرم موسیٰ میوہ صاحب امیر جماعت احمدیہ سیرالیون کی زیر صدارت ہوا۔ مکرم امیر صاحب نے علمی و ورزشی مقابلہ جات میں پوزیشنز لینے والوں میں انعامات تقسیم کیے اور اختتامی خطاب بھی کیا۔ آپ نے جماعت کی ترقی میں انصار اللہ کے کردار کو پیش کرتے ہوئے بتایا کہ آپ کی ذمہ داریاں دو نسلوں کی ہیں اس لئے آپ کو زیادہ محنت کی ضرورت ہے۔ نحن انصار اللّٰہ کا مصداق بنیں اور جماعت کی مضبوطی میں اپنا کردار ادا کریں۔ مکرم امیر صاحب نے اپنے خطاب میں سیرالیون کے مبلغین اور واقفین زندگی کی بے مثال قربانیوں کا ذکر کیا اور انصار کو دعوت دی کہ اسی نمونہ کو زندہ رکھیں۔

الحمد للّٰہ دعا کے ساتھ انصار اللہ کا اجتماع کا نہایت کامیاب پروگرام اختتام پذیر ہوا۔ اجتماع کے آخر پر اجتماعی گروپ فوٹو بھی بنائی گئی۔ انصار اللہ اجتماع کی حاضری 308 حاضرین پر مشتمل تھی۔

مجلس خدام الاحمديہ سيراليون کے تعاون سے اجتماع کے دونوں روز سيشنز کی يوٹيوب کے ذريعہ لائيو سٹريمنگ کی گئی۔ اندرون اور بيرونِ ملک سے متعدد افراد نے اس کارروائي کو سنا اور ديکھا۔

(رپورٹ: ذيشان محمود۔ مربی سلسلہ سيراليون)

پچھلا پڑھیں

فقہی کارنر

اگلا پڑھیں

ارشاد باری تعالی