• 28 جنوری, 2023

اجتماع مجلس انصار اللہ لائبیریا

اللہ تعالیٰ کے فضل سے مجلس انصار اللہ لائبیریا کو اپنا بارھواں سالانہ اجتماع مؤرخہ 26-27؍نومبر 2022ء بروز ہفتہ و اتوار بمقام مسجد بیت العطاء، احمد آباد Kpo River منعقد کرنے کی توفیق ملی۔ الحمد للّٰہ علیٰ ذٰلک

اجتماع کو کامیاب بنانے کے لئے مکرم محمد زکریا باجوہ صاحب (نائب پرنسپل،شاہ تاج احمدیہ ہائی سکول) کی قیادت میں پندرہ ناظمین کی ایک کمیٹی بنائی گئی۔اجتماع کی کامیابی کے لئے حضور انور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیزکی خدمت میں دعائیہ خط تحریر کیا گیا جس کے بعد اجتماع کی تیاری کا آغاز کیا گیا۔

اجتماع کے لئے کچھ کاؤنٹیز سے قافلوں کی آمد کا سلسلہ ایک روز قبل ہی شروع ہو گیا تھا تاہم رجسٹریشن کا باقاعدہ آغاز بروز ہفتہ دوپہر بارہ بجے کیا گیا۔

افتتاحی تقریب

اجتماع کا رسمی افتتاح پرچم کشائی سے نماز ظہر و عصر کی ادائیگی کے بعد دوپہر دو بج کر پندرہ منٹ پر کیا گیا۔ مکرم ڈاکٹر عبدالحلیم صاحب صدر مجلس نے انصار اللہ کا پرچم اور مکرم نوید احمد عادل صاحب امیر ومشنری انچارج نے لائبیریا کا پرچم بلند کیا۔

معاً بعد Mr Muhammad Jones Annan نائب امیر اوّل کی زیر صدارت افتتاحی تقریب منعقد کی گئی جس میں مکرم امیر صاحب لائبیریا نے بطور مہمان خصوصی شرکت کی۔اجتماع کا باقاعدہ آغاز تلاوت قرآن کریم سے کیا گیا جس کی سعادت مکرم مشہود حسن خالد مربی سلسلہ کو حاصل ہوئی۔تلاوت قرآن کریم کے بعد حاضرین نے صدر صاحب مجلس انصاراللہ کے ساتھ مل کر عہد دہرایا۔پھر مکرم ناصر احمد کاہلوں، مبلغ سلسلہ مونٹسیراڈو کاؤنٹی نے نہایت خوش الحانی کے ساتھ منظوم کلام پیش کیا۔ بعدہٗ Mr Tapehma Kortu قائد عمومی نے حضور انور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز کا دعائیہ پیغام پڑھ کر سنایا۔

اپنے افتتاحی خطاب میں مکرم امیر صاحب نے انصار اللہ کو اللہ تعالیٰ کا قرب حاصل کرنے اور اپنے اہل و عیال کی اخلاقی و روحانی حالت بہتر کرنے کے حوالہ سے نصائح کیں۔ اجتماعی دعا کے ساتھ افتتاحی تقریب اپنے اختتام کو پہنچی۔

ورزشی مقابلہ جات

افتتاحی تقریب کے معاً بعد سہ پہر تین بجے Mr Lawrence Momo صاحب ناظم کھیل کی زیر نگرانی ورزشی مقابلہ جات شروع ہوئے جو شام ساڑھے چھ بجے تک جاری رہے۔ امسال ورزشی مقابلہ جات میں چار انفرادی (دوڑسومیٹر، لمبی چھلانگ، کلائی پکڑنا اور پنجہ آزمائی) اور تین اجتماعی (ریلے ریس، فٹ بال اور والی بال) مقابلے شامل تھے۔انصار نے بڑے جوش و خروش سے ان مقابلہ جات میں حصہ لیا اور تمام مقابلوں کو دلچسپ بنایا۔

انتخاب صدر مجلس

شام سات بجے نماز مغرب و عشاء جمع کر کے ادا کی گئیں جس کے بعد مکرم ناصر احمد کاہلوں صاحب مبلغ سلسلہ کی زیر صدارت اگلے دو سال کے لئے صدر مجلس انصار اللہ اور نائب صدر صف دوم کا انتخاب عمل آیا۔

علمی مقابلہ جات

رات نو بجے کھانے سے فراغت کے بعد مکرم منصور احمد صاحب مبلغ سلسلہ کیپ ماؤنٹ کاؤنٹی کی زیر نگرانی علمی مقابلہ جات شروع ہوئے۔ جن میں پانچ انفرادی (تلاوت، نظم، حفظ قصیدہ، تقریر اور اذان) اور اجتماعی مقابلہ میں صرف دینی معلومات شامل تھے۔ علمی مقابلہ جات کے مکمل ہونے پر اجتماع کے پہلے روز کی سرگرمیاں اپنے اختتام کو پہنچیں۔

اجتماع کا دوسرا روز

اجتماع کے دوسرے روز کا آغاز صبح پانچ بجے نماز تہجد کی ادائیگی سے ہوا۔جس کی امامت مکرم عبادہ اسلم قریشی صاحب، مبلغ سلسلہ بونگ کاؤنٹی نے کروائی۔ نماز فجر کی ادائیگی کے بعد مکرم مربی صاحب نے درس دیا۔ جس میں آپ نے انصار کو خلیفہٴ وقت سے مضبوط تعلق پیدا کرنے کے لئے خط لکھنے کی طرف توجہ دلائی۔

مجلس سوال و جواب

درس سے فراغت کے بعد صبح ساڑھے چھ بجے مکرم ناصر احمد کاہلوں صاحب،مکرم آصف احمد صاحب (مبلغین سلسلہ) اور مکرم منصور احمد ناصر صاحب (پرنسپل شاہ تاج احمدیہ ہائی سکول) کے ساتھ ایک مجلس سوال و جواب کا اہتمام کیا گیا۔ جس کا دورانیہ تقریباً دو گھنٹے پر محیط رہا۔شرکاء نے اپنا علم بڑھانے کے لئے بڑی دلجمعی کے ساتھ مبلغین کرام کے جوابات کو سنا۔

مجلس سوال و جواب کے اختتام پر ورزشی مقابلہ جات کے فائنلز منعقد کئے گے جو اختتامی تقریب کے انعقاد سے قبل مکمل ہوئے۔

اختتامی تقریب

دوپہر ساڑھے بارہ بجے مکرم نوید احمد عادل صاحب امیر و مشنری انچارج لائبیریا کی زیر صدارت اختتامی تقریب کا آغاز مکرم مرزا عمر احمد صاحب، مبلغ سلسلہ مارگیبی کاؤنٹی نے تلاوت قرآن کریم سے کیا۔جس کے بعد مکرم محمد شعیب خالد صاحب نے منظوم کلام پیش کیا۔ Mr Tapehma Kortu نے اجتماع کی مفصّل رپورٹ پیش کرنے کے بعد مکرم امیر صاحب کو تقسیم انعامات کے لئے درخواست کی۔

مکرم امیر صاحب نے تقریب کے آخر پر اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا تلاوت کردہ آیات میں اللہ تعالیٰ نے مؤمنین کی کچھ صفات بیان کی ہیں جن میں سے ایک صفت اپنے عہد کی پاسداری کرنا ہے۔ انصاراللہ کا عہد دہراتے ہوئے ہم یہ عزم کرتے ہیں کہ ہم اپنے ایمان کے لئے اپنی ساری زندگی وقف کریں گے اور اپنے ایمان کو دنیاوی امور پر فوقیت دیں گے۔اس کا یہ مطلب نہیں کے ہم دنیاوی کاموں کو بالکل ترک کردیں،اپنے بیوی بچوں اور ان کی ضروریات کو نظرانداز کردیں بلکہ جب نماز کا وقت آئے تو اس وقت ان سب کاموں کو چھوڑ کر نماز کی ادائیگی کے لئے مسجد کا رخ کرنا ایمان کو دنیاوی امور پر فوقیت دینا ہے۔

آپ نے مزید کہا کہ کوئی بھی مذہب قربانی کے بغیر ترقی نہیں کر سکتا۔آج ہمارا مسلمان ہونا یہ حضرت اقدس محمد مصطفیٰ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم اور آپ کے صحابہ رضی اللہ عنہم کی قربانیوں کا نتیجہ ہے۔آج اللہ تعالیٰ کے فضل سے جماعت احمدیہ ہی ہے جو اشاعت اسلام کے لئے جانی و مالی قربانیاں پیش کررہی ہے۔آپ نے صحابہ رضی اللہ عنہم کی مالی قربانی کا ذکر کرتے ہوئے انصار اللہ کو اس بات کی توجہ دلائی کہ ہر ماہ چندہ دینے کی عادت ڈالیں۔

آخر پر آپ نے شرکاء کو اس بات کی طرف بھی توجہ دلائی کہ آپ میں سے اکثریت آ ئمہ اور صدران جماعت کی ہے اس لئے یہ آپ کی ذمہ داری ہے کہ جو بھی آپ نے یہاں سیکھا ہے اس پر خود بھی عمل کریں اور دیگر ممبران جماعت تک پہنچائیں۔اجتماعی دعا کی ساتھ یہ تقریب اپنے اختتام کو پہنچی۔

حاضری

امسال لائبیریا کی نو کاؤنٹیز سے کل 227 انصار نے شرکت کی۔50 مہمانوں کی شرکت سے اجتماع کی کل حاضری 277 رہی۔اللہ تعالیٰ تمام شاملین کو اجتماع کی برکات سے مستفیض کرے۔آمین

(رپورٹ: فرخ شبیر لودھی۔نمائندہ الفضل آن لائن لائبیریا)

پچھلا پڑھیں

الفضل آن لائن 17 جنوری 2023

اگلا پڑھیں

ارشاد باری تعالی